وزارت سائنس نے نئی الیکٹرانک ووٹنگ مشین کی تیاری شروع کردی: شبلی فراز

اسلام آباد( ویب ڈیسک ،فوٹو فائل):وفاقی وزیر سائنس وٹیکنالوجی شبلی فراز نے کہا ہے کہ اشیا اور سروس کے

معیار کو عالمی سطح پر لانے کے لئے پینیک کا ادارہ انتہائی اہمیت کا حامل ہے۔ وزارت سائنس و ٹیکنالوجی نے نئی الیکٹرانک ووٹنگ مشین کی تیاری شروع کردی۔الیکشن کمیشن کے معیارات کے مطابق نئی الیکٹرانک ووٹنگ مشین ایک ماہ میں تیار ہوگی۔دو سال مشکلات میں رہے اب حالات بہتر ہو رہے ہیں۔ملکی معیشت میں تیزی سے بہتری آرہی ہے۔اپوزیشن ملک میں دھاندلی والا نظام چاہتی ہے۔
وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی شبلی فراز نے ورلڈ ایکریڈیٹیشن ڈے کے حوالے سے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اشیا اور سروس کے معیار کو عالمی سطح پر لانے کے لئے پینیک کا ادارہ انتہائی اہمیت کا حامل ہے۔ا ہوں نے کہا کہ وزیراعظم کا مشن ہے کہ پاکستان کو آگے لے کر جانا ہے۔
انہوں نے کہا کہ ہمیں اشیا کے معیار کے حوالے سے لوگوں میں آگاہی بھی پیدا کرنی ہوگی۔وفاقی وزیر نے کہا کہ پاکستان نیشنل ورلڈ ایکریڈیٹیشن کونسل کا ادارہ برآمدات کو بڑھانے میں اہم کردار ادا کرسکتا ہے ،یہ ادارہ پاکستانی مصنوعات کو عالمی معیار کے مطابق لا سکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ ہم نے اداروں کو فعال اور ان کی استعداد اور معیار کو بہتر بنائیں گے۔وفاقی وزیر نے کہا کہ وزارت سائنس وٹیکنالوجی کے تمام 17 ذیلی اداروں کو فعال بناﺅں گا ۔۔
انہوں نے کہا کہ ٹیکنالوجی کے استعمال سے مڈل کلاس اور عام لوگ بھی الیکشن میں حصہ لے سکیں گے ۔انہوں نے کہا کہ نئی الیکٹرانک ووٹنگ مشین پر اگلے مہینے تک کام مکمل ہوجائے گا ۔شبلی فراز نے کہا کہ ہماری کوشش ہے کہ جتنے بھی الیکشن ہوں، چاہے پریس کلب کے الیکشن ہوں وہ شفاف ہو۔ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے شبلی فراز نے کہا کہ پورا پاکستان بجٹ کی طرف دیکھ رہا ہے، گزشتہ دو سال مشکل سے گزارے، لیکن اب ملکی اقتصادی میں تیزی سے بہتری آرہی ہے۔عمران خان اور انکی ٹیم ثابت قدم رہی اور اب اچھی خبریں آرہی ہیں۔