کورونا کی بھارتی قسم پھیلنے کا خدشہ ہے،سربراہ این سی او سی اسد عمر

اسلام آباد( ویب ڈیسک ،خبر ایجنسی،فوٹو فائل ) نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر(این سی او سی) کےسربراہ اسد عمر نے ایک  بار

پھر عوام کو خبر دار کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھارتی ویرینٹ پاکستان میں پھیلنے کا خدشہ ہے اور یہ قسم دنیا کی سب سے خطرناک قسم ہے۔سائنسدان فلسفے کی بنیاد پر نہیں حقائق کی بنیاد پر خبردار کررہے ہیں، پاکستان میں ویکسینیشن کرانے والوں کی تعداد انتہائی قلیل ہے۔

 کو وزےراعظم کے معاون خصوصی برائے صحت فیصل سلطان کے ہمراہ پریس کانفر نس کرتے ہوئے سربراہ این سی اوسی اسد عمر کا کہنا تھا کہ ملک میں 18سال سے زائد عمر کے ساڑھے 12 کروڑ سے زائد لوگ ہیں، ابھی تک 2 کروڑ 21 لاکھ ویکسین کی خوراکیں لگ چکی ہیں، اور 4 دنوں سے یومیہ ویکسینیشن کی تعداد 5 لاکھ سے زیادہ ہے۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ پاکستان میں ویکسینیشن کرانے والوں کی تعداد انتہائی قلیل ہے، پاکستان میں ، ویکسین نہ لگوانے والے 333 افراد میں ایک شخص کو کورونا ہوا، جب کہ ویکسین کی ایک ڈوز لگوانے والے1250 لوگوں میں ایک شخص کو کورونا ہوا، آپ نے ویکسین نہیں لگوائی تو آپ کو 4 گنا زیادہ خطرہ ہے۔سائنسدان فلسفے کی بنیاد پر نہیں حقائق کی بنیاد پر خبردار کررہے ہیں۔

سربراہ این سی او سی کا کہنا تھا کہ کورونا کی بھارتی قسم دنیا کی سب سے خطرناک قسم ہے، جو تیزی سے پھیلتی ہے، بھارتی قسم کے وائرس نے پورے خطے میں تباہی مچائی اور پاکستان میں بھارتی ویرینٹ پھیلنے کا خدشہ ہے، عوام سے ویکسین لگوانے کی درخواست ہے، عید کی چھٹیوں میں احتیاط کی ضرورت ہے۔