ملکہ برطانیہ کے شوہر شہزادہ فلپ انتقال کرگئے

لندن(ویب ڈیسک)ملکہ برطانیہ الزبتھ دویم کے شوہر ڈیوک آف ایڈنبرا شہزادہ فلپ

انتقال کرگئے۔ ان کی عمر 99 برس تھی۔شہزادہ فلپ کی موت کا اعلان شاہی خاندان کے آفیشل ٹوئٹر اکاونٹ سے شیئر کی گئی ٹوئٹ میں کیا گیا۔
ٹوئٹ میں کہا گیا کہ 'انتہائی دکھ کے ساتھ ہم یہ اعلان کرتے ہیں کہ ملکہ برطانیہ کے شوہر، شہزاد فلپ، ڈیوک آف ایڈنبرا نہیں رہے'۔رائل فیملی کی ٹوئٹ میں بتایا گیا کہ شہزادہ فلپ کی اچانک موت جمعہ کی صبح کو ونڈسر محل میں ہوئی۔ بکنگھم پیلس کے مطابق شہزادہ فلپ کچھ دنوں سے بیمار تھے۔بیکنگھم پیلس کی جانب سے جاری بیان میں ملکہ کی جانب سے انتہائی دکھ کے ساتھ ان کے شوہر پرنس فلپ، ڈیوک آف ایڈنبرا کی موت کا اعلان کیا گیا،عالمی میڈیا کے مطابق نامعلوم انفیکشن کے شکار اور دل کے مرض میں پیچیدگیوں کے باعث دو ماہ سے اسپتال میں زیر علاج شہزادہ فلپ المعروف ڈیوک آف ایڈنبرا سینٹ بارتھولومیو اسپتال میں جمعہ کو جہان فانی سے کوچ کرگئے۔
شہزادہ فلپ کورونا وبا کے باعث ملکہ برطانیہ کے ساتھ شاہی محل سے دور ایک صحت افزا مقام پر مقیم تھے اور کورونا ویکسین بھی لگوا چکے تھے تاہم 17فروری کو وہ خود گاڑی چلاتے ہوئے اسپتال معمول چیک اپ کے لیے گئے تھے۔ایڈورڈ کنگ کے معالجین نے شہزاہ فلپ کو احتیاطا اسپتال میں داخل ہونے کا مشور دیا تھا، اسپتال میں داخل ہونے کے بعد سے ان کی طبیعت بگڑتی چلی گئی جس کے بعد انہیں یکم مارچ کو سینٹ بارتھولومیو اسپتال منتقل کیا گیا تھا۔
شاہی خاندان کے ترجمان شہزادہ فلپ کے کورونا میں مبتلا ہونے کے باعث اسپتال منتقلی کی افواہوں کی تردید کرتے آئے ہیں، ترجمان کا کہنا تھا کہ شہزادہ فلپ کو عمر رسیدہ ہونے کے باعث دل اور دیگر پیچیدگیوں کا سامنا ہے۔